Notice: Only variables should be assigned by reference in /home/islaminp/public_html/templates/forte/vertex/responsive/responsive_mobile_sidebar.php on line 8

Notice: Only variables should be assigned by reference in /home/islaminp/public_html/templates/forte/vertex/responsive/responsive_mobile_menu.php on line 278

Home

Video

Audio

Articles

Download

عبادات

Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/models/item.php on line 763

Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/models/item.php on line 763

Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/models/item.php on line 763

Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/models/item.php on line 763

Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/models/item.php on line 763

Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/models/item.php on line 763

Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/models/item.php on line 763
عبادات

عبادات (7)

نماز . زکوۃ . روزہ . حج

سوال:- آدم جی نگر کی مکہ مسجد کو تعمیر ہوئے ۱۵ سال تقریباً ہوگئے، تب سے جنازے کی نماز مسجد کے میدان میں ہوا کرتی تھی، امام صاحب کی امامت کے آخری ایام میں محراب کے بیچ میں کھڑکی توڑ کر دروازہ بنادیا گیا اور محراب کے باہر چار فٹ اُونچا چبوترہ بنایا گیا، اب چبوترے پر جنازہ رکھ دیا جاتا ہے اور محراب کا دروازہ کھول دیا جاتا ہے، جنازہ کی نماز مسجد میں پڑھی جاتی ہے، نئے امام صاحب نے جنازے کی نماز کا یہ طریقہ بند کردیا ہے اور پہلے کی طرح نماز کھلے میدان میں ہونے لگی ہے، مولانا مفتی محمد اسماعیل صاحب نے گجراتی کتاب میں جو فتویٰ کی کتاب ہے، لکھا ہے کہ جنازے کی نماز کسی حالت میں مسجد میں پڑھنا مذہبِ حنفی میں مکروہِ تحریمی ہے۔ اب کون سا طریقہ دُرست تھا؟ بہشتی گوہر میں مسئلہ کیا لکھا ہے؟ اور کہا جاتا ہے کہ حرمین میں مسجد میں نمازِ جنازہ پڑھی جاتی ہے، آپ واضح فرمائیں کیا حکم ہے؟


Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/templates/default/category_item.php on line 134

مناسک حج :
تلبیہ : لَبَّیْکَ اَللّٰھُمَّ لَبَّیْکَ لَبَّیْکَ لَا شَرِیْکَ لَکَ لَبَّیْکَ اِنَّ الْحَمْدَ وَالنِّعْمَۃَ لَکَ وَالْمُلْکَ لَا شَرِیْکَ لَکَ۔
ترجمہ۔ میں حاضر ہو ں اے اللہ میں حاضر ہوں۔میں حاضر ہوں تیرا کوئی شریک نہیں ۔ میں حاضرہوں بیشک ساری تعریفیں اور سب نعمتیں اور بادشاہت تیری ہی ہے ۔تیرا کوئی شریک نہیں۔
فرائض حج : ۱) احرام نیت کر کے۔ ۲) وقوف عرفات(۹ تاریخ کو زوال تا غروب کسی بھی وقت)۔ ۳) طوافِ زیارت(۱۰ ذی الحجہ تا ۱۲ ذی الحجہ کے غروب تک)
واجبات حج : ۱) رمی جمار (3 شیطانوں کو مارنا)۔ ۲) قربانی کرنا(دم شکر) ۳) حلق یاقصر کرنا۔ ۴) ان تینوں میں ترتیب۔ ۵)وقوف مزدلفہ۔ ۶)حج کی سعی۔ ۷)آخری طوافِ وداع۔


Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/templates/default/category_item.php on line 134

حضور اقدس ﷺ کاارشاد ہے اللہ جل جلالہ‘ نے اس شہر مدینہ کا نام طابہ رکھا ہے۔
فائدہ : ابن حجر مکی رحمتہ اللہ علیہ لکھتے ہیں کہ مدینہ طیبہ کے تقریباً ایک ہزار نام ہیں جن میں امام نووی رحمتہ اللہ علیہ نے اپنے مناسک میں مشہور ہونے کی وجہ سے پانچ نام ذکر کئے ہیں۔ مدینہ، طیبہ، طابہ، دار، یثرب ، ان میں سے یثرب زمانہ جاہلیت کا نام ہے۔حضور ﷺنے اس کو پسند نہیں فرمایا ۔یثرب کے معنی ملامت اور حزن کے ہیں اور حضور ﷺ کی عادت شریفہ برا نام بدل کر بہتر نام رکھنے کی تھی۔
حضور ﷺ کا ارشاد ہے کہ مجھے ایک ایسی بستی میں رہنے کا حکم کیا گیا جو ساری بستیوں کا کھا لے لوگ اس بستی کو یثرب کہتے ہیں اس کا نام مدینہ ہے وہ برے آدمیوں کو اس طرح دور کر دیتی ہے جس طرح بھٹی لوہے کے میل کچیل کو دور کر دیتی ہے۔


Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/templates/default/category_item.php on line 134

حق تعالیٰ کا ارشاد ہے ۔ یقینا وہ مکان سب سے پہلے لوگوں(کی عبادت) کے واسطے مقرر کیا گیا وہ مکان ہے جو مکہ میں ہے(یعنی کعبہ شریف)وہ برکت والا مکان ہے اور تمام لوگوں کے لئے ہدایت (کی چیز )ہے۔
فائدہ۔حضرت علی کرم اللہ وجہہ سے نقل کیا گیا کہ مکانات تو اس سے پہلے بھی تھے لیکن عبادت کے لئے سب سے پہلے یہی مکان موضوع ہوا۔
جیسا کہ مکہ مکرمہ میں نیکیوں کا ثواب بہت زیادہ ہے ایسے ہی وہاں گناہ کا وبال بھی سخت ہے اسی وجہ سے حضرت عمر رضی اللہ عنہ فرماتے ہے کہ مکہ سے باہر ستر لغزشیں مکہ کی ایک لغزش سے بہتر ہیں۔
بہتر ہے کہ جب مسجد شریف میں داخل ہو اعتکاف کی نیت کر لیا کرے تا کہ اتنی دیر اعتکاف کا ثواب مستقل ہوتا رہے اور مسجد الحرام اور مسجد نبوی میں تو خاص طور سے اس کا خیال رکھے۔ حضور اکرم ﷺکا ارشاد ہے کہ اللہ تعالیٰ کی ایک سو بیس رحمتیں روزانہ اس گھر پر نازل ہوتی ہیں


Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/templates/default/category_item.php on line 134

نماز ِ جنازہ فرض کفایہ ہے۔ اس میں دو فرائض ہیں ۱۔ قیام یعنی کھڑے ہو کر پڑھنا ۔ ۲۔ چار بار تکبیر کہنا
نماز ِ جنازہ میں تین سنتیں ہیں ۔ ۱۔ اﷲ کی حمد و ثناء کرنا ۲۔ نبی ﷺ پر درود شریف پڑھنا ۳۔ میّت کے لیے دعا کرنا


Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/templates/default/category_item.php on line 134

۔ جب بھی سو نے کے بعد اٹُھیں تو بغیر ہاتھ دھوئے کھا نے پےنے کے برتنوں میں ہاتھ مت ڈالئے کیا معلوم سوتے میں آپ کا ہاتھ کہاں کہاں پڑا ہو۔
۔غسل خانے کی زمین پر پیشاب نہ کریں بالخصوص جب غسل خانے کی زمین کچی ہو۔
۔پیشاب پاخانہ کرتے وقت قبلہ کی طرف منہ نہ کریں اور نہ پیٹھ کیجئے۔
۔فراغت کے بعد طاق ڈھیلوں سے صفائی کریں پانی سے استنجا کریں۔لید‘ ہڈی ‘کوئلہ صفائی کے لئے ہرگز استعمال نہ کریں۔بعد از صفائی صابن یا مٹی سے ہاتھ صاف کر لیں۔
۔پیشاب پاخانہ کی ضرورت کے وقت کھانا کھانے نہ بیٹھیں۔پہلے طہارت حاصل کر لیں۔
.۔نرم اور ریتلی زمین پر پیشاب کریں جس سے پیشاب زمین میں جذب ہو جائے اور آپ کا بدن اور کپڑے چھینٹوں سے محفوظ رہیں۔
۔ہمیشہ بیٹھ کر پیشاب کریں۔ طبعی مجبوری کی وجہ سے کھڑے ہوکر بھی پیشاب کر سکتے ہیں۔ ویسے یہ ایک بُری عادت ہے۔
.۔ندی نہر کے کنارے عام لوگوں کے گزرگاہوں اور سایہ دار جگہوں پر میوے کے باغ میں یا پکے ہوئے فصل میں جو ابھی کاٹی نہ گئی ہوں پیشاب پاخانہ کرنے سے پرہیز کریں۔
۔طہارت حاصل کرتے وقت پاﺅں میں جوتے ضرور پہنیں اور سر کو ٹوپی یا چادر سے ضرور ڈھانپیں۔
۔طہارت سے فراغت کے دوران باتیںنہ کریں‘تھوکیں اور نہ کچھ کھائیں پیئں۔
۔دوران طہارت اعضائے مخصوصہ پر زیادہ زور نہ دیں۔
۔باہر پیشاب کی ضرورت ہو تو کسی سوراخ میں پیشاب نہ کریں۔
۔ہوا کے مخالف سمت میں بیٹھنا۔
۔سردی میں پہلا ڈھیلا پیچھے سے آگے کرنا اور گرمی میں پہلا ڈھیلا آگے سے پیچھے کرنا۔
۔پیشاب کرنے سے پہلے قرآن و حدیث کے نسخے وغیرہ جیبوں سے نکال کر ایک طرف رکھ دیں۔
۔بیت الخلاءمیں جاتے وقت بایاںپاﺅں اندر لے جائیں اور یہ دعا پڑھ لیں اللھم انی اعوذ بک من الخبث والخبائث(بخاری)۔ خدایا تیری پناہ چاہتا ہوں نر شیطانوں سے اور مادہ شیطانوں سے۔
۔پیشاب پاخانہ کرتے وقت سورج چاند کو نہ دیکھیں اور بلا ضرورت شرمگاہ کو بھی نہ دیکھیں۔
۔دوران فراغت کسی بھی قسم کا ذکر نہ کریں اور نہ اذان کا جواب دیں۔
۔دو زانوںبیٹھیں ۔دایاںہاتھ سر کے اوپر اور بایاں ناف پر رکھیں۔
۔کپڑے زیادہ نہ اٹھائیں‘جھولی کے برابر اُٹھائیں۔
۔بغیر ضرورت کے قضائے حاجت کو نہ دیکھیں۔
۔بیت الخلاءسے فارغ ہونے کے بعد دایاں پاﺅں باہر نکالیں اور ےہ دعا پڑھیں الحمد ﷲالذی اذھب عنی الاذی و عافانی (نسائی ،ابن ماجہ)۔ترجمہ: اللہ کا شکر ہے جس نے مجھ سے تکلیف دور فرمائی اور مجھے عافیت بخشی۔
۔ناک صاف کرنے‘بلغم تھوکنے کے لئے احتیاط کے ساتھ اگالدان استعمال کریں یا لوگوں کی نظروں سے بچ کر منہ ایک طرف کرکے اپنی ضرورت پوری کریں۔
۔بار بار ناک میںانگلی ڈال کر گندگی نکالنے سے پرہیز کریں۔
۔رومال یا چادر میں بلغم یا تھوک ملنے سے پرہیز کریں۔
۔منہ میں پان چھالیہ بھر کر لوگوں کے سامنے باتیں نہ کریں۔
۔تمباکو‘پان ‘نسوار استعمال کرنے سے حتی المقدور پرہیز کریں اور اگر استعمال کرتے ہوں تو اپنے منہ کی صفائی کا خیال کریں۔
۔چھینکتے وقت منہ پر رومال رکھیں یا منہ ایک طرف کر لیں۔


Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/templates/default/category_item.php on line 134

١.سونے كي دعا
اَللّٰهُمَّ بِاسْمِكَ اَمُوْ تُ وَاَحْيٰي.
اے اﷲ تعاليٰ ميں تيرے نام پر مرتا هوں اور جيتا هوں.
٢.جاگنے كي دعا
اَلْحَمْدُ لِلّٰهِ الَّذِيْٓ اَحْيَانَا بَعْدَمَآ اَمَاتَنَا وَاِلَيْهِ النُّشُوْرُ.
تمام تعريفيں اﷲ تعاليٰ كے ليے جس نے هميں موت(نيند ) كے بعد حيات (بيداري)عطا فرمائي اور هميں اسي كي طرف لوٹنا هے.


Warning: count(): Parameter must be an array or an object that implements Countable in /home/islaminp/public_html/components/com_k2/templates/default/category_item.php on line 134

Contact us

Mufti Muhammad Ismail Toru

Jamia Masjid-e-Aqsa Street No. 2 Railway Scheme No. 7 Railway Hospital Near Passport Office, Rawalpindi
Phone no. : 
+92 335 0290786 (for SMS n Call)
+92 311 4440006 (for whatsapp)
Email 1 : This email address is being protected from spambots. You need JavaScript enabled to view it.
Email 2 : This email address is being protected from spambots. You need JavaScript enabled to view it. (in case you don't get answered from Email 1)
Timing : 11 AM - 1:00 PM , and between Magrib & Esha Prayers, Thursday & Friday is Off

Bank Information :

Account Holder: Mufti Muhammad Ismail Toru
Account number: 0100296832013
Branch code 822
IBAN : pk65AIIN00001002966832013
Al Baraka bank, Bank Road, Rawalpindi